How to Boost Immunity During Cold and Flu Season | Winter Health Tips | Urdu Vila

سرد موسم پاکستان میں گرمی کی تیز گرمی سے راحت کا باعث بن سکتا ہے۔ جیسے جیسے سردی قریب آتی ہے، یہ سردی لگ سکتی ہے اور لوگوں کو نزلہ زکام اور فلو جیسی بیماریوں کا شکار بنا سکتی ہے۔ اکثر بیمار ہونا آپ کی پیداواری صلاحیت کو متاثر کر سکتا ہے اور آپ کے لیے کام کرنا مشکل بنا سکتا ہے۔

بیمار کام پر جانا آپ کے ساتھی کارکنوں کو بیماری منتقل کر سکتا ہے، جو کہ نقصان دہ ہے۔ لہذا، جب آپ کی طبیعت ٹھیک نہ ہو تو کام پر جانے سے گریز کریں، کیونکہ اس سے بیماری پھیل سکتی ہے۔ اگر آپ کی کوئی اہم میٹنگ یا کام ہے، تو آپ کو بیمار ہونے پر گھر سے کام کرنے پر غور کرنا چاہیے۔ سردی اور فلو سے دور رہنے کا بہترین طریقہ قوت مدافعت کو مضبوط کرنا ہے۔

ایک مضبوط مدافعتی نظام آپ کے جسم کو انفیکشن اور دیگر بیماریوں سے لڑنے میں مدد دے سکتا ہے۔ کم قوت مدافعت والے افراد کے اکثر بیمار ہونے کا امکان زیادہ ہوتا ہے۔ کمزور قوت مدافعت والے لوگوں کے لیے متعدی بیماریوں سے بازیابی مشکل ہو سکتی ہے اور یہ مہلک بھی ہو سکتی ہے۔

اپنی قوت مدافعت بڑھانے پر کام کریں کیونکہ جیسے جیسے سردی قریب آتی ہے، سرد موسم اور سموگ صحت کے مسائل، خاص طور پر سانس کے مسائل کا باعث بن سکتے ہیں۔ اگر آپ زکام یا فلو میں مبتلا ہیں جو بہتر نہیں ہو رہا ہے تو علاج کے لیے لاہور میں جنرل فزیشن سے رجوع کریں۔

How to Boost Immunity During Cold and Flu Season | Winter Health Tips | Urdu Vila

How to Boost Immunity During Cold and Flu Season

Ways to boost immunity

قوت مدافعت بڑھانے والی غذائیں کھائیں

آپ کو فٹ اور صحت مند رکھنے کے لیے صحت مند غذا کا استعمال بہت ضروری ہے۔ غذائی اجزاء اور اینٹی آکسیڈنٹس سے بھرپور غذائیں آپ کی قوت مدافعت کو بہتر بنانے میں فائدہ مند ثابت ہو سکتی ہیں۔ اینٹی آکسیڈنٹس سوزش کو کم کرکے جسم میں آزاد ریڈیکلز کے خلاف لڑ سکتے ہیں۔ اومیگا 3 فیٹی ایسڈ والی غذائیں، جیسے مچھلی اور زیتون کا تیل، بھی سوزش میں مدد کر سکتی ہیں۔ فری ریڈیکلز کی وجہ سے دائمی سوزش دل کی بیماری اور کینسر سمیت کئی بیماریوں کا باعث بن سکتی ہے۔

سبزیوں، پھلوں، پھلیاں اور گری دار میوے جیسے کھانے میں موجود فائبر آپ کے آنتوں میں صحت مند بیکٹیریا کو بڑھاتا ہے اور آنتوں کی صحت کو بہتر بناتا ہے۔ آپ کے نظام انہضام میں داخل ہونے والی بیماریوں سے بچنے کے لیے آنتوں کی اچھی صحت بہت ضروری ہے۔ مزید یہ کہ وٹامن سی سردی اور فلو کے امکانات کو کم کر سکتا ہے۔ ان تمام خصوصیات کے آمیزے والی متوازن خوراک قوت مدافعت کو مضبوط بنا سکتی ہے۔ وہ غذائیں جو مدافعتی نظام کو مضبوط کرسکتی ہیں ان میں شامل ہیں:

ھٹی پھل
ادرک
لہسن
پالک
سبز چائے
بلیو بیریز
بروکولی
تیل والی مچھلی

پروبائیوٹکس لیں

پروبائیوٹکس آپ کے جسم کو صحت مند گٹ بیکٹیریا فراہم کرنے میں مددگار ہیں۔ خمیر شدہ کھانے، جیسے دہی، کمچی، سلامی، اور کھٹا، پروبائیوٹکس پر مشتمل ہوتے ہیں، اور ایسی غذائیں اپنے روزمرہ کے کھانے میں شامل کریں۔ یہ غذائیں آپ کے آنتوں میں اچھے بیکٹیریا کے تناسب کو بڑھا سکتی ہیں اور قوت مدافعت کو مضبوط بنانے میں مدد کر سکتی ہیں۔ آپ پروبائیوٹکس کو سپلیمنٹس کی شکل میں بھی لے سکتے ہیں۔

کافی نیند حاصل کریں۔

آپ کے جسم کے مناسب کام کے لیے نیند ضروری ہے۔ جب آپ اپنے جسم کی ضرورت سے کم سوتے ہیں، تو آپ کا جسم اینٹی باڈیز پیدا کرنے کے قابل نہیں ہوتا جو انفیکشن سے لڑنے میں مدد کر سکتا ہے۔ اپنی قوت مدافعت کو مضبوط رکھنے کے لیے دن میں سات سے نو گھنٹے سویں۔ نیند کی کمی آپ کے وائرل اور متعدی بیماریوں سے بیمار ہونے کے امکانات کو بڑھا سکتی ہے۔ یہ تناؤ کے ہارمونز کو بھی بڑھا سکتا ہے اور آپ کے جسم میں سوزش کا سبب بن سکتا ہے۔

جسمانی طور پر متحرک رہیں

باقاعدہ ورزش یا تیس منٹ کی چہل قدمی بھی بیماریوں سے بچاؤ میں مددگار ثابت ہوتی ہے۔ یہ تناؤ کو بھی کم کرتا ہے جو آپ کی قوت مدافعت کے لیے فائدہ مند بناتا ہے، کیونکہ زیادہ تناؤ کی سطح آپ کے لیے وائرس یا فلو کو پکڑنا آسان بنا سکتی ہے۔ یہ خون کے ہموار بہاؤ کی بھی اجازت دیتا ہے، جس سے مدافعتی خلیات بڑھتے ہیں اور آپ کے جسم کے تمام حصوں تک پہنچ سکتے ہیں۔ جب کہ جسمانی طور پر متحرک رہنا آپ کو بیماریوں سے بچا سکتا ہے، اس لیے اسے زیادہ نہ کریں۔ بہت زیادہ ورزش آپ کے مدافعتی نظام کو نقصان پہنچا سکتی ہے۔

تناؤ کا انتظام سیکھیں۔

کمزور ذہنی صحت صحت کے بہت سے مسائل کا باعث بن سکتی ہے۔ تناؤ بہت سی بیماریوں کا ایک اہم عنصر ہے، اور یہ آپ کے مدافعتی نظام کو کمزور کر سکتا ہے۔ یہ تیزی سے وزن میں کمی، وزن میں اضافہ، نیند میں خلل، اور بہت سے دوسرے مسائل کا باعث بن سکتا ہے جو آپ کی قوت مدافعت کو بری طرح متاثر کر سکتے ہیں۔ مصروف نظام الاوقات کی وجہ سے تناؤ ہمارے معمولات کا حصہ بن چکا ہے۔

مختلف دباؤ والے حالات لوگوں کو مختلف طریقے سے متاثر کر سکتے ہیں۔ اس بات کی شناخت کرنا سیکھیں کہ آپ کو کس چیز پر دباؤ ہے اور اس سے نمٹنے کے طریقے تلاش کریں۔ اگر آپ کو اپنے معمولات میں بہت زیادہ تناؤ کا سامنا کرنا پڑتا ہے، تو آپ اس سے نمٹنے کے لیے کسی معالج سے بات کر سکتے ہیں۔ آپ کو پرسکون کرنے کے لیے یوگا یا مراقبہ بھی آزما سکتے ہیں۔

ہائیڈریٹڈ رہیں

آپ کی مجموعی صحت کے لیے پانی پینا بہت ضروری ہے۔ یہ بہت سے جسمانی افعال کو منظم کرنے میں مدد کرتا ہے۔ پانی کی کمی صحت کے مسائل کا باعث بن سکتی ہے، جیسے ہاضمہ، توجہ، گردے کا کام، اور موڈ میں تبدیلی۔ اس سے بیمار ہونے کا خطرہ بھی بڑھ سکتا ہے۔ یہ سوزش کو کم کرنے اور آپ کو مختلف بیماریوں سے بچانے میں بھی مدد کر سکتا ہے۔

کم از کم اتنی مقدار میں پانی پئیں جس کی آپ کے جسم کو روزانہ ضرورت ہوتی ہے۔ آپ اپنے آپ کو ہائیڈریٹ رکھنے کے لیے چائے اور دیگر مشروبات بھی پی سکتے ہیں۔ اس بات کو یقینی بنائیں کہ آپ پھلوں کے جوس سمیت میٹھے مشروبات کی مقدار کو کنٹرول کرتے ہیں تاکہ شوگر کی زیادہ مقدار کی وجہ سے مسائل سے بچا جا سکے۔

غیر صحت بخش عادات کو ترک کریں۔

کچھ عادتیں، جیسے تمباکو نوشی اور شراب نوشی، آپ کی صحت پر منفی اثر ڈال سکتی ہے۔ تمباکو نوشی آپ کی صحت کے لیے بہت سی خرابیاں رکھتی ہے اور کینسر کا باعث بن سکتی ہے۔ اسی طرح زیادہ شراب پینا آپ کے جگر کو نقصان پہنچا سکتا ہے اور آپ کی قوت مدافعت کو کم کر سکتا ہے۔ ان عادات کو چھوڑنا آپ کی قوت مدافعت کو بڑھا سکتا ہے۔ دوسرے طریقوں کو چھوڑ دیں جو آپ کی صحت کو نقصان پہنچا سکتے ہیں، جیسے کہ بیٹھنے کا طرز زندگی اور غیر صحت بخش غذا۔

آنتوں کی صحت کو بہتر بنائیں

حالیہ تحقیق سے پتہ چلتا ہے کہ آپ کے مدافعتی نظام کا ایک بڑا حصہ آپ کے آنتوں میں ہے۔ صحت مند آنت بیماریوں سے بچا سکتی ہے اور آپ کی قوت مدافعت کو مضبوط بنا سکتی ہے۔ مضبوط قوت مدافعت کے لیے آپ کے آنتوں کی صحت کو بہتر بنانا ضروری ہے۔ اپنے آنتوں کو صحت مند رکھنے کے لیے، پوری غذا کھائیں اور پراسیسڈ فوڈز اور چینی کو اپنی غذا سے ختم کرنے کی کوشش کریں۔ مقصد یہ ہے کہ غیر صحت بخش گٹ بیکٹیریا کے مقابلے اچھے بیکٹیریا کو بڑھایا جائے۔

Conclusion

بدلتے موسم نے سموگ اور سرد موسم کو جنم دیا ہے۔ سموگ کے دیگر بہت سے خطرات کے ساتھ ساتھ یہ سانس کی بیماریوں کا باعث بھی بن سکتا ہے۔ سموگ اور سردیوں کا موسم لوگوں کو بیماریوں خصوصاً نزلہ زکام اور فلو کا شکار بناتا ہے۔ احتیاطی تدابیر آپ کو بیمار ہونے سے بچا سکتی ہیں۔ زیادہ تر بیماریوں سے اپنے آپ کو بچانے کے بہترین طریقوں میں سے ایک اپنی قوت مدافعت کو بہتر بنانا ہے۔

آپ کئی طریقوں سے مضبوط قوت مدافعت پیدا کر سکتے ہیں۔ صحت مند طرز زندگی مدافعتی صحت کی حمایت کرنے کا ایک مؤثر طریقہ ہے۔ متوازن غذا، باقاعدہ ورزش، اور نقصان دہ عادات کو چھوڑنا آپ کے مدافعتی نظام کو بہتر بنا سکتا ہے۔ قوت مدافعت بڑھانے والی غذائیں اپنی خوراک میں شامل کریں۔ کسی بھی وٹامن کی کمی کو چیک کریں اور اگر ضرورت ہو تو سپلیمنٹس لیں۔

بہتر استثنیٰ کے لیے، کسی معالج سے بات کرکے یا تناؤ کو کم کرنے والی تکنیکوں، جیسے یوگا کے ذریعے تناؤ کا انتظام کریں۔ بیماریوں سے بچنے کے لیے احتیاطی تدابیر اختیار کریں۔ اچھی حفظان صحت اور حفاظتی ٹیکے آپ کو زکام اور فلو سے بچا سکتے ہیں۔

How to Boost Immunity During Cold and Flu Season | Winter Health Tips | Urdu Vila

For Latest Government and Private Jobs: Click Here

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *